انوکھی بیماری میں مبتلا بھارتی بچے کی زندگی اجنبی خاتون نے بچا لی

516485-mahindra-1463813037-105-640x480

نئی دلی: ایک غریب بھارتی بچہ جو پیدائشی طور گردن کی عجیب و غریب بیماری میں مبتلا ہے اس کی وجہ سے اس کی گردن 180 ڈگری پر گھوم سکتی، اس کے والدین بھی اس کے مرنے کی دعائیں مانگ رہے تھے لیکن چار ہزار میل دور موجود اجنبی لڑکی نے اس کی زندگی بچا لی۔

13 سالہ مہندرا آہیوار پیدائشی طور پر ایک نایاب بیماری میں مبتلا ہے۔ اس بیماری کی وجہ سے اس کی گردن کے پٹھے اس قدر کمزور ہیں کہ وہ اس کے سر کا بوجھ نہیں اٹھا سکتے۔ یہی وجہ ہے کہ اس گردن ڈھلک کر جسم سے لگی رہتی ہے اور وہ اپنی گردن کو 180 ڈگری کے زاویے پر گھما سکتا ہے۔ مہندرا کے والدین نے اس کے علاج کے لیے درجنوں ڈاکٹروں سے رابطہ کیا لیکن کسی کے پاس اس کا علاج موجود نہ تھا۔ اس بیماری کے علاج کے خاص قسم کی سرجری درکار تھی جس کے لیے بہت زیادہ پیسے درکار تھے جو کہ مہندرا کے غریب خاندان کے پاس نہیں تھے، مہندرا کے والدین صورت حال سے اس قدر تنگ ّگئے کہ وہ اپنے ہی لخت جگر کی موت کی دعائیں مانگنے لگے۔